آپ آف لائن ہیں
جنگ ای پیپر
اتوار15؍محرم الحرام 1441ھ 15؍ستمبر 2019ء
Namaz Timing
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیئرمین و ایگزیکٹوایڈیٹر: میر جاوید رحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن

بھارتی ریلے سے ستلج کی سطحِ آب میں مسلسل اضافہ

دریائے ستلج میں پانی کی سطح میں اضافہ جاری


بھارتی ریلے کی وجہ سے دریائے ستلج میں پانی کے بہاؤ اور سطح آب میں مسلسل اضافہ جاری ہے، فلڈ کنٹرول روم کے مطابق بھارت کی جانب سے چھوڑا گیا پانی آج رات کوٹ مٹھن سے گزرے گا۔

کچے کے علاقوں سے لوگوں کی محفوظ مقامات پر نقل مکانی جاری ہے، دریائی بیلٹ کے علاقوں میں فلڈ ریلیف کیمپس قائم کر دیے گئے ہیں۔

دریائے ستلج میں ہیڈ سلیمانکی کے مقام پر پانی کی سطح میں مسلسل اضافہ جاری ہے، فلڈ کنٹرول سینٹر کے مطابق سیلابی پانی سے تحصیل منچن آباد کے متعدد دیہات زیرِ آب آگئے ہیں۔

ریسکیو اہلکار دریائی علاقوں کے رہائشیوں اور ان کے مال مویشیوں کو کشتیوں کے ذریعے فلڈ ریلیف سینٹرز میں منتقل کر رہے ہیں۔

ادھر دریائے چناب کے سیلابی ریلے سے جھنگ کے درجنوں دیہات زیرِ آب ہیں جبکہ سیلابی علاقوں میں قائم سرکاری اسکول گراؤنڈز میں پانی جمع ہونے کی وجہ سے بند ہیں اور سینکڑوں طالب علم تعلیم حاصل کرنے سے محروم ہیں۔

راجن پور میں دریائے سندھ میں پانی کی بلند سطح برقرار ہے، کوٹ مٹھن کے کچے کے کئی سرکاری اسکول زیرِ آب آچکے ہیں۔

سیلابی پانی رات کوٹ مٹھن اور روجھان کے مقام سے گزرے گا، انتظامیہ نے مختلف مقامات پر ریلیف کیمپ بھی قائم کر دیئے ہیں۔

ادھر سکھر بیراج سے سیلابی ریلہ کوٹری بیراج کی جانب جا رہا ہے، کسی بھی ممکنہ خطرے کے پیشِ نظر تمام دریائی بندوں اور پشتوں کی کڑی نگرانی کی جا رہی ہے۔

قومی خبریں سے مزید