آپ آف لائن ہیں
جنگ ای پیپر
جمعہ 9؍صفر المظفّر 1440ھ 19؍اکتوبر2018ء
Namaz Timing
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیئرمین و ایگزیکٹوایڈیٹر: میر جاوید رحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن
عمران اپنا عیب چھپاتے دوسروں کی فتح مشکوک بناتے ہیں ، چانڈیو

کراچی(جنگ نیوز)پیپلز پارٹی کے نومنتخب سینیٹر مولا بخش چانڈیو نے کہا ہے کہ خیبرپختونخوا میں ہماری طرف سے ارکان اسمبلی کی خرید و فروخت ممکن نہیں ہے، عمران خان کا کام دوسرے کی فتح کو مشکوک بنانا اور اپنے عیب چھپانا ہے، نواز شریف نے ایسی سیاست کی ہے کہ خودکش بمبار بن گئے ہیں، یہ تاثر غلط ہے کہ پیپلز پارٹی رضا ربانی کو چیئرمین سینیٹ نہیں بنوانا چاہتی ہے،چیئرمین سینیٹ کیلئے نام تجویز کرنا پارٹی چیئرمین کا استحقاق ہے۔ وہ جیو نیوز کے پروگرام ”کیپٹل ٹاک“ میں میزبان حامد میر سے گفتگو کررہے تھے۔ پروگرام میں ن لیگ کے نومنتخب سینیٹر رانا محمود الحسن، بلوچستان سے نومنتخب سینیٹر انوار الحق کاکڑ اور اے این پی کی رہنما شگفتہ ملک بھی شریک تھیں، شگفتہ ملک نے کہا کہ سینیٹ الیکشن میں پورے ملک میں خصوصاً خیبر پختونخوا میں بدترین ہارس ٹریڈنگ ہوئی، انوار الحق کاکڑ نے کہا کہ اس دفعہ چیئرمین سینیٹ بلوچستان سے آنا چاہئے، چیئرمین سینیٹ کیلئے کسی پارٹی نے ہمارے ساتھ ابھی باقاعدہ رابطہ نہیں کیا۔رانا محمود الحسن نے کہا کہ چوہدری سرور

پنجاب میں ہماری توقع سے زیادہ ووٹ لے گئے، زبیر گل کو کم ووٹ ملنے پر پارٹی تحقیقات کررہی ہے، ایسا نہیں کہ زبیر گل کی جگہ لوگوں نے مجھے ووٹ ڈال دیئے ہوں، مجھے اکتالیس ووٹ پڑنا تھے لیکن ایک ووٹ کم ملا۔پروگرام کیلئے مختلف سیاسی رہنماؤں سے بھی سوال پوچھا گیا کہ نیا چیئرمین سینیٹ کون ہوگا؟ کا جواب دیتے ہوئے پیپلز پارٹی کی سینیٹر روبینہ خالد نے کہا کہ چیئرمین سینیٹ کیلئے رضا ربانی کے علاوہ پرویز رشید بھی اچھی چوائس ہیں۔جے یو آئی ف کے سینیٹر حافظ حمد اللہ نے کہا کہ رضاربانی نے جس طرح سینیٹ چلائی اس پر انہیں خراج تحسین پیش کرنا چاہئے۔

Chatاپنی رائے سے آگاہ کریں